صفحہ اول / دنیا / ہوٹل کیٹلفونیا – گائے بیلوں کے لیے شاندار ہوٹل

ہوٹل کیٹلفونیا – گائے بیلوں کے لیے شاندار ہوٹل

ھواپور کےلوگ ، ٹانگیل نامی شہر میں فخر سے کہ سکتےہیں کہ انکے ہاں ملک کی دوسری سب سے بڑی کیٹل مارکیٹ ہے. مگر وہ یہ کسی کو نہیں بتائیں گے کہ دو سو سے زائد خاندان کیٹل کے لیے ہوٹل چلاتے ہیں.

دورسےتولگتا ہے کہ بس بہت سے بیل اور گئے بندھے ہیں جو گھاس پھونس کھا رہے ہیں مگر اصل میں یہ ہوٹل ہیں جہاں جانوروں کو رہائش اور اچھا کھانا پینا ، وقت پر فراہم کیا جاتا ہے.. اگرمثال کے طورپر اگرکوئی تاجر چالیس گائے لےکر کسی دوسرے شہر سے آتا ہےتوکسی بھی ایک دن میں اسکے پاس دس بارہ گاۓ سے زیادہ نہیں بک سکیں گی، وہ انہیں ہوٹل میں رکھوا دےگا
ایک رات رکنےکا ایک گائے کا کرایہ پندرہ ٹکہ ہوگا ہول سیل ریٹ ، ایک ٹرک بھرے جانورکا ایک رات کاکرایہ چار سوٹکہ پڑ جاتاہے. ہوٹل کاملک جانوروں کے چارے کا بھی بندوبست کرےگا.

” یہ ہوٹل ہمارا مال بچا لیتے ہیں، ان کیوجہ سے ہم نقصان سے بچ جاتے ہیں ” یہ کہناتھا زاہدحسین کا جو بوگرا ڈسٹرکٹ سےائے تھے..
یہ ممکن ہی نہیں کہ ہمیشہ سارا کا سارا مال ایک دن میں بک جائے ، اگریہ ہوٹل نہ ہوتے توہمیں کافی نقصان ہوتا ..

یہ دو سو خاندان جو گوبندہ باشی کی کیٹل مارکیٹ کے اس پاس رہتے ہیں ، سارا سال یہ کام کرتےہیں ، یہ کیٹل مارکیٹ بھی سارا سال چلتی ہے، یہ سب لوگ اپنے اپنے کام میں بہت پروفیشنل ہیں اور یہ کام کل وقتی طور پر کرتے ہیں..
یہ دیکھنے میں ایک چھوٹا سے عید بازار لگتا ہے جانوروں کا لیکن اصل میں یہ سارا سال چلنے والے مویشی ہوٹل ہیں جہاں انہیں رہائش اور خوراک فراہم کی جاتی ہے
ڈھاکہ کی گبتلی مارکیٹ کی طرح یہ بھی ایک مستقل مارکیٹ ہے.  بقرعید کے بعد یہ مارکیٹ صرف اتواراور جمرات کے روز کھلتی ہے ، لہذا ہفتے کے باقی دنوں میں یہ جانوروں کے ہوٹل میں جانور قیام کرتے ہیں ہیں.
عیدالاضحی کے موقعہ پر ہوٹل کاکاروبار خاصا چمک اٹھتا ہے… عمران علی ایک ایسے ہی ہوٹل کے ملک ہیں انکا کہنا ہےکہ میں نے یہ ہوٹل پچیس سال پہلے بناۓ تھے ، اب میرا کاروبار خاصا آگے بڑھ چکا ہے….
مقامی جانوروں کا ایک بیوپاری کہتا ہے کہ  جانوروں کے ہوٹل کایہ  کاروبار خاصا پرکشس ہے اگر اس طرح کے ہوٹل اور بڑھ جائیں اور جانوروں کو مارکیٹ میں لانے اور رکھنے کے اخراجات میں کمی ہو سکے تو اور لوگ جانور لاکر یہاں فروخت کر سکتے ہیں جس کےنتیجےمیں لوگوں کو کم قیمت جانور مل سکتےہیں…

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے