صفحہ اول / سیاحت / نیپال میں پاکستانیوں کو پسند کیا جاتا ہے – کھٹمنڈو میں مقیم پاکستانی خالد محسن سے بات چیت

نیپال میں پاکستانیوں کو پسند کیا جاتا ہے – کھٹمنڈو میں مقیم پاکستانی خالد محسن سے بات چیت

"نیپال میں پاکستانیوں کو پسند کیا جاتا ہے- ایک بار سفر میں ساتھ بیٹھے نیپالی نے کافی دیر تک مجھ سے بات نہ کی اور جب اسے پتہ چلا کہ میرا تعلق پاکستان سے ہے تو ناراض ہوا کہ بتایا کیوں نہیں ؟ میں تو تمہیں کسی اور قوم کا سمجھا  "-


خالد محسن بھائ سے پر لطف اور دلچسپ بات چیت دیر تک جاری رہی جو اپنے والد کے علاج کے لیئے خانپور سے کراچی آئے ہوئے ہیں- آپ نیپال میں ایک بڑی این جی او کے کنٹری مینیجر کےفرائض انجام دے رہے ہیں اور نیپال کے چپے چپے سے واقف ہیں- نیپال میں ساڑھے چار فیصد مسلمان اور نوے فیصد ھندو آبادی ہے- گزشتہ زلزلے کے موقع پر پاکستان آرمی نےنیپال میں بڑے پیمانے پر امدادی سرگرمیوں میں حصہ لیا تھا جس سے نیپالی عوام میں پاکستانیوں سے محبت اور بڑھی – خالد محسن بھائ کے بقول وہاں براہ راست پاکستان سے بزنس نہیں اور پاکستانی شان مصالحے تک بھارت سے ہوکر ہی آتے ہیں – …

 

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے